وادس منز گلریز رسالس متعلق اکھ لۅکٹ بحث


واد رسالس منز چھہ گلریز رسالس متعلق اکھ لۅکٹ بحث سپدمت، یمیک ذکر ضروری چھہ۔ عزیز حاجنی یس چھہ پروفیسر محی الدین حاجنی ین وونمت زِ "گلریز” رسالہ اوس تمی کوڈمت تہ پانس سیتۍ ٲسن مرزا عارف تہ امین کامل تھاوۍ متۍ۔ امہ کہ بند گژھنک وجہ اوس یمن دۅن درمیان نفہکۍ پونسہ باگراونک جھگڑہ، یتھ پروفیسر حاجنی ین فیصلہ کٔرتھ دژاو مگر یمو دریو مون نہ۔ یم کتھہ چھیہ عزیز حاجنی ین شیرازس منز چھپیمتس پننس اکس مضمونس منز ونہِ مژہ۔ تمیک اقتباس چھہ:

” گلریز رسالہ چھپییوو کاشرِ زبانۍ منز یہنزوے (مطلب پروفیسر محی الدین حاجنی سنزو) کوششو سیتۍ تہ توتام رود یہ باقاعدہ پاٹھۍ چھپان یوت تام یم (مطلب پروفیسر محی الدین حاجنی) اتھ سیتۍ وابستہ رودۍ۔ ۔۔ یہ رسالہ چلاونس منز ٲسۍ یمن مرزا غلام حسن بیگ عارف تہ امین کامل تہِ سیتۍ ۔۔۔ یہ رسالہ بند گژھنک اصلی وجہ اوس سہ فتنہ یُس کامل صابس تہ عارف صابس نفہک پونسہ بٲگراونس پیٹھ ووتھ۔ تہ یہ فتنہ انزراونہ خاطرہ دژاو میہ (مطلب پروفیسر محی الدین حاجنی) عاقلی فیصلہ زِ گلریز کہ آمدنی ہندۍ ہریمانہ پٲنسہ گژھن محض امہ رسالہ چہ ترقی خاطرہ تھاونہ ینۍ۔” (شیرازہ جنوری فروری 1988)

اتھ پیٹھ سوز کاملن وادس اکھ خط یس واد شمارہ 12 کس دویمس حصس منز چھپیوو۔ اتھ منز ٲسۍ کاملن حاجنی سند یہ بیان غلط ثابت کرنہ خاطرہ یم حقایق پیش کرۍ متۍ:

(1)  گلریزک گۅڈنیک شمارہ دراو نومبر 1952 ہس منز۔ اتھ چھہ بانی مرزا عارف تہ ترتیب امین کامل تہ پرنٹرپبلشر
محمد صدیق کبروی ٹاکارہ پاٹھۍ چھپتھ۔
(2) فروری 1953 ہس اندر ییلہ کامل امہ ادارہ نش الگ سپد (کامل آو ژکہ سبکدوش کرنہ)، مرزا عارفن بناوۍ محی الدین حاجنی تہ عبدالحق برق کامل سنزِ جایہ ترتیب کار۔
(3) اگر یہ رسالہ محی الدین حاجنی یُن اوس تہ امۍ مرزا عارف تہ امین کامل پانس سیتۍ رٹۍ متۍ ٲسۍ تم کتھہ پاٹھۍ ٲسۍ رسالک نفع بٲگران تہ محی الدین حاجنی اوسکھ فیصلہ دوان کٔرتھ۔

اوت تام اوس صحیح زِ عزیز حاجنی ین لیوکھ تہِ یہ تمۍ محی الدین حاجنی یس نش بوز، مگر کامل سند جواب پٔرتھ پزِ ہے تس اکس ادیب سندۍ پاٹھۍ یمن کتھن متعلق تحقیق کرُن، نزِ واپسی جوابس منز یہ لیکھن: "(کامل) چھہ کافی ادبی سفر طے کرنہ باوجود تہِ اپرِ کس حدس تام جبلت خود نمایی ہند شکار۔ یمہ کتھہ ونہِ میہ حاجنی صٲبن مگر کامل صٲب چھہِ دپان زِ یہ چھہ سراسر اپُز! خیر زبان درازی گوو نہ جان۔”

جبلت خود نمایی ہند کس نہ چھہ شکار؟ مگر گلریز رسالہ کین متعلقہ شمارن ہندۍ گۅڈہ ورق چھہ پیش تاکہ محی الدین حاجنی سنز غلط بیانی گژھہِ ننۍ تہ عزیز حاجنی یس گژھہِ احساس ز یژھہ کتھہ چھیہ نہ جذباتن بلکہ تحقیقک تقاضہ کران۔

gul1

یہ چھہ گۅڈنیک شمارہ، یتھ مرزا عارف بانی لیکھتھ چھہ، محی الدین حاجنی سند چھہ نہ کانہہ ناو نشانے، نہ اداریہس منز تہ نہ مندرجاتن منز۔

gul 2

یہ چھہ پٍنژم شمارہ۔ کامل دراو تریمہ شمارہ پتہ، مرزا عارفن رٹۍ محی الدین حاجنی تہ
عبدالحق برق پانس سیتۍ۔

Gul 3

تمہ پتہ 1955 ہس منز بند گژھتھ، آو 1961 منز دوبارہ کڈنہ، مرزا عارفن رٹۍ غلام نبی خیال تہ مرزا حبیب الحسن پانس سیتۍ۔

عزیز حاجنی صابا، وونۍ ما اوس گلریز رسالہ محی الدین حاجنی ین کوڈمت؟

وادس منز گلریز رسالس متعلق اکھ لۅکٹ بحث” پر 2 تبصرے

جواب دیں

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

آپ اپنے WordPress.com اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ /  تبدیل کریں )

Google photo

آپ اپنے Google اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ /  تبدیل کریں )

Twitter picture

آپ اپنے Twitter اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ /  تبدیل کریں )

Facebook photo

آپ اپنے Facebook اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ /  تبدیل کریں )

Connecting to %s