کُنیرے بوزکھ


shk

کُنیرے بوزکھ کُنہِ نو روزکھ
امۍ کنرن کوتاہ دیت جلاو
عقل تہ فکر تور کوت سوزکھ
کمۍ مالہِ چیتھ ہیوک سہ دریاو

شیخ العالم

کُنیر گوو توحید۔ خدایہ سنز ذات چھیہ لاشریک۔ کُنۍ۔ بوزُن گوو کنہِ چیزس کن تھاون۔ کنہِ چیزس کن دھیان دین۔ کانہہ چیز سمجھن تہ زانن۔ بوزن گوو حساب لگاون تہِ۔ روزُن گوو کنہِ جایہ ٹھہرن، قرار کرن۔ "کُنیرے بوزکھ” چھہ شرطیہ فقرہ۔ اکھ فرض کرنہ آمت صورت حال۔ اگر تہِ سپدِ، اگر خدایہ سنز ذات سمجھنۍ ہیکھ، زاننچ کوشش کرکھ، کنہِ روزکھ نہ۔ کنہِ نہ روزن گوو وحشت طاری گژھن تہ کنہِ جایہ نہ قرار لبُن۔ بیاکھ معنی گوس پنن آسُنے راوُن۔ جلاو دین گوو نپہ نپہ کرن، چمکن۔ نون نیرُن۔ یعنی امہ کنرہ منزہ کوتاہ، لانہایت دراو نون۔ عقل چھیہ انسان سنز زان حاصل کرنچ صلاحیت یمچ بنیاد پانژن حیسن پیٹھ چھیہ تہ فکر چھیہ امہ صلاحتچ عمل۔ "توت کوت سوزکھ” گوو عقلہ ہند توت نہ واتن، رسایی نہ حاصل گژھنۍ۔ وتی ژھۅکن۔ تریم مصرعک عقل واتہِ نہ توت تام چھہ دۅشونی کتھن پیٹھ لاگو۔ عقل ہییکہِ نہ کنرس تام وٲتتھ تہ توت تام تہِ نہ یہ امۍ کنرن بود چھہ کورمت، لانہایت جلاو۔ لفظ "تور ” چھہ قابل غور۔ تور کوت سوزکھ یعنی کانہہ وسیلہ چھہ نہ تہ بییہ چھیہ نہ سۅ کانہہ مخصوص جاے یوت کانہہ چیز سوزنہ ییہِ۔ بوزکھ لفظہ کہ تعلقہ ونو زِ کنرس حساب لگاون چھہ ناممکن۔ اسۍ ہیکو نہ امہ کس جلاوس تہِ حساب لٲگتھ۔ خدا (توحید) سمجھن تہ زانن چھہ نہ انسانہ سندِ خاطرہ ممکن۔ ٲخری مصرعہ چھہ اتھ مابعدالطبیاتی خیالس اکہ مثالہِ سیتۍ محبتہ سان (مالہِ) سمجھاونچ کوشش کران۔ یہ چھہ ضرب المثل۔ دریاو چینک چھہ نہ سوالے۔ پیٹھہ کُس دریاو؟ "سہ دریاو” یُس سانہِ دریاوہ تہِ زیادے دریاو چھہ تکیازِ دریاو چھہ لگارتار، ژھینہ روس، ہمیشہ وسوُن۔ یُس چیۍ چیۍ تہِ ختم گژھہِ نہ ۔ سہ روزِ تتۍ تیتھے۔ سہ چھہ یہ دپۍ زِ تہِ ازلی ابدی۔

یہ شروک چھہ توحید وجودی یس کن اشارہ۔ یمہ مطابق خدایہ سندِ مفرد ذاتہ تہ وجودہ ورٲے بییہ کانہہ/کینہہ موجود چھہ نہ۔

کُنرس وون میہ خدایہ سنز ذات، اسۍ ہیکو اتھ صرف کُنیر تہِ ؤنتھ یا ونوس "کینہہ نہ”۔

اتھ شروکس منز چھہ /ک/ آوازِ ہند تکرار۔ گۅڈنکین دۅن مصرعن منز چھہ/ن/ آوازِ ہند تہِ تکرار یُس قابل توجہ چھہ۔ یم زہ آوازہ رٔلتھ چھہ لفظ "کُن” تہِ بنان۔ یم آوازہ چھیہ کُنرہ چہ تہِ کلیدی آوازہ۔

جواب دیں

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

آپ اپنے WordPress.com اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ /  تبدیل کریں )

Google+ photo

آپ اپنے Google+ اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ /  تبدیل کریں )

Twitter picture

آپ اپنے Twitter اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ /  تبدیل کریں )

Facebook photo

آپ اپنے Facebook اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ /  تبدیل کریں )

Connecting to %s