نونک مسلہ: اقتباس


Salt spilled from shaker

نونس پیٹھ میانہ مضمونہ منزہ اکھ اقتباس:

نونس متعلق یم تہِ لفظ مختلف بحثن منزمثالن ہندۍ پاٹھۍ پیش کرنہ یوان چھہِ، حقیقت چھٮہ یہ زِ کانسہِ چھہ نہ تمن لفظن ہندس اصل مسلس کن ظن گوٚمت۔ حقیقت چھیہ یہ زِ یمن لفظن ہند تعلق چھہ سیدِ سیوٚد کاشرِ زبانۍ ہندس صوتی مزازس سیتۍ۔ اگر یمن لفظن ہندس معاملس منز کاشریو شاعرو غیرشعوری طورکانہہ اجتماعی فیصلہ نمت چھہ، تتھ پتہ کنہِ چھہ سانہِ زبانۍ ہند مزازہ اوسمت۔ رفیق راز چھہ ونان زِ "یہ چھٮہ نہ عروض نش بٮہ خبری ہنز مثال بلکہ عروضس سیتۍ سہل انگاری ورتاونچ مثال "۔ (انہار 2005، ص ۱۱۱) امہ بیانہ تلہ چھہ ظاہر زِ یمن لفظن متعلق یم فیصلہ ننہ آمتۍ چھہِ تم چھہِ نہ لاعلمی ہند نتیجہ بلکہ "سہل انگاری” یتھ بہ بہتر پاٹھۍ کاشرِ زبانۍ ہندِ مزازچ مجبوری ناو دمہ۔ سوال چھہ نہ قابلیتک زِ اسہِ تگیا یا نہ تگیا فارسی ؍اردو عروضس منز یمن لفظن ہندس معاملس منز کھرہ کرنہ آمت اصول پننٮن شعرن منز مہارت سان ورتاون بلکہ یہ زِ یہ اصول چھا سانہِ زبانۍ ہندس صوتی عادتس ستیۍ واٹھ کھٮوان ؟یہ چھہ نہ عروضی چابکدستی ہند معاملہ بلکہ پننہِ زبانۍ ہنزِ صوتی آسایشہِ ہند معاملہ۔

رفیق رازنۍ گۅڈنکۍ زہ نکتہ چھہِ یتھ کتھہِ کن اشارہ کران زِ عروض چہ تقطیع منز چھہِ ملفوظی اچھر شامل گژھان، مکتوبی نہ۔ یہ ملفوظی مکتوبی بحث آو عربی عروضس منز تشدید تہ زیٹھٮن مصوتن ہندس سلسلس منز بارسس، مگر امہِ بحثچ اہمیت ہرییہ ییلہ عروض باقی زبانن تام ووت یمن ہند ہیجلۍساخت عربی نش مختلف اوس۔ لہذا اوس سوال زِ کم اچھر نموکھ تقطیع منز مجرا تہ کم نموکھ نہ۔ اصول اوس بنتھے۔ اچھرن کن مہ گژھو۔ آوازن کن گژھو۔ اگر آواز اچھرہ وراے لفظس منز موجود چھٮہ، سۅ ییہ شامل کرنہ تہ اگر اچھرٲستھ تہِ آواز آسہِ نہ ، سہ اچھر ییہ نہ شامل کرنہ۔ یہ اصول چھہ آسان مگر کینژن اچھرن متعلق یہ فیصلہ کرن چھہ مشکل زِ تم چھا مکتوبی غیر ملفوظی کنہ مکتوبی ملفوظی، تکیازِ تمن آوازن متعلق چھہ اختلاف راے۔ یمن منز ہیکون اسۍ نونک معاملہ تہِ تھٲوتھ۔ یہ ملفوظی غیر مکتوبی تہ مکتوبی غیر ملفوظی معاملہ چھہ یتھ کتھہِ کن اشارہ زِ عروضس منز چھہِ نہ اچھر جسمانی طور اہم بلکہ چھہ یہند مجرد تصوری وجود اہم۔ تقطیع چھٮہ امی تصوری اچھرہ مطابق سپدان، زبانۍ ہندِاملا مطابق نہ۔ لہذا ہٮکو نہ اسۍمکتوبی غیر ملفوظی تہ ملفوظی غیر مکتوبی تجزیہ وراے کنہِ شعرچ تقطیع کرتھ۔کینہہ اچھر چھہِ تراونہ یوان تہ کینہہ چھہ تصور کرنہ یوان۔ ییتہِ نس روزِ نہ یہ دلچسپی نٮبر اگر اسۍ عربی تہ فارسی یس منز یمن ہند مختصر جایزہ ہٮمو۔ عربی زبانۍ منزاوس نہ اچھرن ہنزِ امہِ کمی بیشی ہند زیوٹھ فہرست مگر فارسی یس منز گوٚو اتھ ہرٮر۔

عربی یس منز چھہِ تقطیع منز بنم اچھر تصور کرنہ یوان یعنی ملفوظی غیر مکتوبی ماننہ یوان:
(1)تنوین؛(2) تشدید؛(3) اللہ، ھذی، ذالک ہوٮن لفظن منزالف؛ (4)مصرعہ کس ٲخرس پٮٹھ ژھوٚٹ مصوتہ۔
یمو علاوہ چھہ عربی زبانۍ منز ھمزہ الوصل تراونہ یوان (یعنی مکتوبی غیر ملفوظی ماننہ یوان)۔

فارسی زبانۍ منز ہریوو یہ فہرست سٮٹھا۔ مثلا بنم اچھر آیہ مکتوبی غیر ملفوظی قرار دنہ:
(1) (خ) پتہ ینہ وول ژھوٚپ واو(و)؛
(2)زیٹھہِ مصوتہ پتہ نون (ن) یعنی نون غنہ؛
(3)یکوٹہ ینہ والٮن ساکن اچھرن منز ترییم اچھر یعنی نیست (ن ی س ت )لفظک (ت) ۔
یمو علاوہ آیہ بنم اچھر اختیاری طور مکتوبی غیر ملفوظی قرار دنہ:
(4)خاص کرعربی لفظن منز تشدید (یتھ تم تخفیف ونان چھہِ۔ مثلا نیّت ، دُرّ، کفّ بیترِ لفظن منز تشدیداختیاری طور ختم کرنۍ۔)؛
(5) ہاے مخفی مثلا کہ، نامہ لفظن ہندٲخری (ہ)؛
(6) لفظک ٲخری واو (و) اگر امہِ نش مراد مصوتہ آسہِ۔ مثلا دو، تو، بیترِ ۔
بنم اچھر آیہ اختیاری طور ملفوظی غیر مکتوبی قرار دنہ:
(1) کینژن لفظن منز آیہ اختیاری طور تشدید تصور کرنہ۔ مثلا شکر بنیوو شکّر، امید بنیوو امّید؛
(2) اضافت آیہ اختیاری طور مشدد کرنہ۔ مثلا رنگِ گل آو (رنگے گل) تہِ گنڈنہ؛
(3) بہ ، نہ بیترِ آیہ (بی) تہ (نا) تہِ گنڈنہ۔
یمو علاوہ آے کینہہ متحرک اچھراختیاری طور ساکن تہِ بناونہ۔
مثلاگفتمش(گف۔ت۔مش) آو گفتمش (گف۔تمش) میم ساکن بنٲوتھ تہِ، بگذرد (ب۔گ۔ز۔رد) آو بگذرد (بگ۔ ز۔ رد) گاف ساکن بنٲوتھ تہِ ، تہ عربی لفظ برکت (ب۔ر۔کت) آو برکت (بر۔کت) رے ساکن بنٲوتھ تہِ گنڈنہ۔
یتھے پاٹھۍ آیہ ساکن اچھر اختیاری طورمتحرک بناونہ۔
(1)مثلا( عشق و حسن) آو (عشقو حسن) قاف متحرک بنٲوتھ تہِ ،(2) نصر تہ رقم ہوۍ لفظ آیہ (فع۔ل) علاوہ (ف۔عو) صۅاد تہ قاف متحرک بنٲوتھ تہِ گنڈنہ۔

امہ فہرست تلہ ہیکہِ کانہہ تہِ اندازہ کٔرتھ زِ فارسی یس منز کٲژا تبدیلیہ تہ اختیارات آیہ پیدہ کرنہ تاکہ شعرن ہیکہِ صحیح تقطیع گژھتھ۔ اردو والٮو کرِ نہ زیادہ تبدیلییہ تکیازِ فارسی والٮو یم تبدیلیہ کرِ مژہ آسہ تم آیہ تمن بکار۔ امہِ علاوہ رودۍ تم فارسی عروضس زیادہ تراچھ ؤٹتھ تقلید کران۔ اردوس چھہِ اسۍ ساری واقف، لہذا یمو اسۍ سیوٚدے کاشرس کن واپس۔

کلاسیکل عربی زبانۍ منزٲسۍ نہ ہیجلہِ کس شروعس تہ ٲخرس پٮٹھ(ٲخرس پٮٹھ خال خال) مصمتن ہندۍ خوشہ cluster مگر کینژن زبانن منز مثلا فارسی یس منزٲسۍواریاہن لفظن اندرٲخرس پٮٹھ مصمتی خوشہ یوان۔ فیصلہ سپد یہ زِ دوٚیمس مصمتس پٮٹھ گژھہِ نیم فتحہ تصور کرنہ ین تاکہ مصمتہ گژھہِ تقطیع منز شامل۔ یمن لفظن ہندۍ دۅشوےٲخری مصمتہ ٲسۍ ساکن۔ عربی عروض مطابق ہٮکن نہ زہ ساکن حرف اکۍ سے جایہ جمع گژھتھ، لہذا آوٲخری مصمتہ متحرک بناونہ، محسوس یا تصور کرنہ۔اگر امہِ ٲخری مصمتہ پتہ مصوتہ یوان آسہِ یہ چھہ پانے متحرک بنان تہ اگر مصمتہ یوان آسہِ،یا مصرعس منز تھکھ cesura لگان آسہِ، یہ چھہ متحرک تصور کرنہ یوان ۔ کاشرس منز چھہِ لفظہ کس آغازس منزتہِ مصمتی خوشہ تہ امہِ خوشک گۅڈنیک مصمتہ چھہ عربی عروضی اصطلاحن منز ساکن اچھر۔ عربی زبانۍ تہ عروضس منز چھہ نہ لفظہ کس آغازس منز ساکن اچھر ینک کانہہ سوالے۔ تتہِ لگاوہن اتھ ہمزہ الوصل بتھہِ تہ خوشہ کرہن دۅن حصن منز تقسیم۔ مگر اسۍ ہٮکو نہ تہِ کٔرتھ، لہذا بنوو اسہِ غیرشعوری طور یہ اصول زِ دویو منزہ ییہ اکوے مصمتہ تقطیع اندر۔ یعنی یمو منزہ بنیوو دوٚیم اچھر مکتوبی غیر ملفوظی، حالانکہ صوتیات چہ وچھن ترایہ کنۍ چھہِ یم دۅشوے مکتوبی ملفوظی۔” کرٮکھ” لفظس منز چھٮہ گۅڈنکس ہیجلس منز وارہ کارہ (ک) تہ (ر) دۅشونی مصمتن ہنزہ آوازہ موجود۔یتھے پاٹھۍ” رنگ” لفظک نون تہِ آو مکتوبی غیر ملفوظی اچھر بناونہ، حالانکہ آواز چھٮہ اکس یا بییس حالتس منز موجود۔

جواب دیں

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

آپ اپنے WordPress.com اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ /  تبدیل کریں )

Google+ photo

آپ اپنے Google+ اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ /  تبدیل کریں )

Twitter picture

آپ اپنے Twitter اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ /  تبدیل کریں )

Facebook photo

آپ اپنے Facebook اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ /  تبدیل کریں )

Connecting to %s