کاشر ادب – اکھ بہترین رسالہ (قسط 3)


kadab

رحمن  راہی سنزِ "جلوہ تہ زبور” علاوہ چھپییہ رسالس منز تہندس اکس روایتی غزلس سیتۍ سیتۍ "چون خط ووتم” تہ "ٲہی” زہ نظمہ۔ جلوہ تہ زیور نظمہِ متعلق چھہ شیم احمد شیم  لیکھان زِ "رحمن راہی سنز نظم جلوہ تہ زبور چھیہ تتھ فنی بلندی کُن اشارہ کران یۅسہ شاعرس تہ پرن وٲلس درمیان تعلق پیدہ کرنہ بدلہ ژھین چھیہ دوان۔” رسالس منز چھہ ڈاکٹر فاسٹس کہ ٲخری سینک راہی سند ترجمہ تہِ اکس شمارس منز چھپان۔

کامل سندۍ چھہ کل تریہ غزل چھپان یمن متعلق رشید نازکی لیکھان چھہِ زِ "کامل صابنۍ غزل چھہِ حاصل شمارہ۔ غزل چھہ کاملن رام کو٘رمت یا غزلن چھہ کامل رام کو٘رمت۔ زندگی ہندۍ نیتھہ ننۍ معنی غزلہ کس پیمانس منز وٲلتھ مس تہ شہل تصور پیدہ کرُن چھہ کاملن ہنز کٲم۔”

نادم چھہ انٹرویووس منز کامل نین یمن غزلن متعلق ونان زِ "کاملن یہ غزل یُس زیر بحث چھہ، سہ چھہ تموے منزہ اکھ یم نوِ کاشرِ غزلچ نشاندہی چھہِ کران۔ امیک مزازہ تہ امچ تلہ تراو چھیہ کاشر۔ امیک سوالیہ انداز، امچ قافیہ بندی تہ امیک ردیف چھہِ سٲری کاشرس پیٹھ۔ یۅسہ روانی تہ سلاست اتھ غزلس منز چھیہ سۅ چھیہ اتھ سہل ممتنی قبیلک بناوان۔ یہ چھہ غزلک معراج تصور کرنہ یوان۔ امہ علاوہ چھہ اتھ غزلس منز ہندی دیومالا أنتھ امہ کس مضمونس وسعت تہ نویر میولمت۔ یمہِ اندازہ مینکا، اپسرا، نٲگراے قافیس منز استعمال آمتۍ چھہِ کرنہ، تمہِ اندازہ ہیکہِ ہے نہ بییہ کانہہ تہِ حوالہ (allusion) غزلہ کین یمن مصرعن ہمہ گیر بنٲوتھ۔ موضوع کنۍ تہِ چھہ یہ غزل سیٹھا نو٘و۔ ردیف چھہ شاعرس الگ کڈتھ تتھ لکہ ارساتس سیتۍ شامل کران یس وقتہ چیو بیہ سۅکھ ترایو بدون چھہ کو٘رمت تہ یس زندگی ہند ٹیچھر سرکشی کن چھہ پکناوان۔ یہ وٲراگ چھہ نہ فرارک وٲراگ بلکہ چھہ وٲراگ یس حساب ہینس پیٹھ آمادہ چھہ گو٘مت۔ امہ علاوہ چھہ غزل روایتی قدرن ہندۍ پۅتلۍ پھٹراونس پیٹھ آمادہ کران۔ حالانکہ غزل چھہ "میہ کیاہس پیٹھ” مگر یہ "میہ کیا” چھہ سہ یُس جابر وقتس میون خیال انزۍ منزۍ ہینس پیٹھ مجبور کرِ۔

حرام چھکھ اگرہے قبرِ میانہِ پیور تھون
میہ سیتۍ گیہ تہِ زن یم میانۍ شعر ضایع میہ کیا

یہ چھہ نہ محض سہ احتجاج یُس شاعر پننس بدون کڑنہ ینس کران چھہ بلکہ یہ چھہ احساسک سہ شدید مطالبہ یُس شاعر سند جذبہ بزور شمشیر ماناوان چھہ۔”

اختر محی الدین نیو ترجمو علاوہ چھہ تسند اکھ افسانہ "گلاب روے” اکس شمارس منز چھپیومت۔ افسانن منز چھہِ دیپک کول سند "ژھانپ”، بنسی نردوش سند "مستہ کلف”، غلام نبی شاکر سند "میہ تہِ تو٘ر نہ فکرِ” تہ "آکڈۍ”، کلدیپ رعنا سند "کۅلہ ٹونچ”، شبنم قیوم سند "گٹہِ منز گاش، گاشہِ منزہ گٹہ” چھپیمتۍ۔

رسالہ کس اکس شمارس منز چھپیوو کاشرِ زبانۍ ہندس مایوس رفتارکس موضوعس پیٹھ اکھ سمپوزیم یتھ منز شاہد بڈگامی، مظفر عازم، فاروق نازکی، بشیر شاہ تہ موتی لال ساقی ین حصہ نیو۔ شاہد بڈگامی وو٘ن رسم خط چھہ ناکارہ، مظفر عازمن وو٘ن لکن چھیہ نہ دلچسپی، فاروق نازکی ین وو٘ن سورے راہ چھہ حکومتس، بشیر شاہن وو٘ن ژھرِ راہ تہ بییہ نہ کینہہ تہ موتی لال ساقی ین وو٘ن وحہہ چھہ نہ اکھ۔  یہ چھہ سیٹھا دلچسپ سمپوزیم۔ 35 ؤری پتہ تہِ چھہ یہ ازیک صورت حال باسان۔

کاشر ادب کین شمارن منز چھپییہ سنتوش، شمس فقیر، رسول میر، غلام رسول نازکی، غلام نبی فراق، مظفر عازم، غلام نبی خیال،محی الدین گوہر،رشید نازکی، مشعل سلطانپوری، چمن لال چمن، رسول پونپر، غلام احمد گاش، شریف الدین شارق، سجود سیلانی، مکھن لال محو، محمد ایوب بیتاب، موتی لال ناز، غلام نبی عارض، مکھن لال کنول، فرحت گیلانی، مکھن لال بیکس، عبدالرحمن طالب، محمد امین شکیب،عبدالرحمن سرور، عایشہ مستور، جواہر لال سرور، منظور ہاشمی،  موہن لال آش، ارجن دیو مجبور، موہن نراش، رادھے ناتھ مسرت، محمد شفیع شاد، عبدالغنی ندیم، فردوس رعنا، غلام احمد عابد، خورشید احمد طالب، تنہا نظامی، غلام محمد غمگین، شفیع شوق، غلام نبی ناظر، رحیم ساجد، جگن ناتھ ساحرعبدالخالق رنجور، فاضل کاشیمری، ٹیلر عبدالرشید، شوکت انصاری، پرتھوی ناتھ کول سایل، عبدالرحمن آزاد، محمد یوسف عاجز سندۍ غزل تہ نظم ۔

(یہ لسٹ چھہ امہ مۅکھہ دنہ یوان تاکہ پرن وٲلس گژھہِ اندازہ امہ وقتہ کم کم شاعر چھہِ اندۍ پکھۍ ٲسمتۍ۔)

جواب دیں

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

آپ اپنے WordPress.com اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ /  تبدیل کریں )

Google+ photo

آپ اپنے Google+ اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ /  تبدیل کریں )

Twitter picture

آپ اپنے Twitter اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ /  تبدیل کریں )

Facebook photo

آپ اپنے Facebook اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ /  تبدیل کریں )

Connecting to %s