امین کامل سند افسانہ "گابہ گندُر”


کٲشر افسانہ اوس اکہ وقتہ داہ باہ صفحہ آسان۔ لۅکٹۍ افسانہ تہِ ٲسۍ مگر عام طور اوس افسانہ داہن صفحن اندۍ پکھۍ آسان۔ وارہ وارہ ژھوکیوو یہ۔ وجہ نامعلوم۔ شاید ژیون نثر لیکھن والیو زِ کاشر پرنک رفتار چھہ نہ تیز یمہ کنۍ زیٹھۍ افسانہ پرنۍ شاید وبال جان بنان چھہِ۔ نتہ ما چھیہ یہ افسانہ نگارن ہنز کہالت۔ کیہہ تام وجہ چھہ۔ بہرحال وجہ یہ چھہ تہ تہِ، امین کامل سندِ افسانک ہوجم تہِ ژھوکیوو تمن افسانن منز یم تمۍ 1980 یور کن لیکھۍ۔ گابہ گندر چھہ یُتھے اکھ مختصر افسانہ۔ یہ چھہ "سوال چھہ کلک” افسانکۍ پاٹھۍ خالص ڈایلاگس پیٹھ مشتمل۔ کامل چھہ یمن افسانن منز کنہِ علاوہ تبصرہ ورٲے اکھ صورت حال پرن وٲلس برونہہ کنہِ تھاوان۔ یہ افسانہ چھہ اکی آنہ واریاہن سطحن پیٹھ پرنک مطالبہ کران۔

از اوس نہ ٹرینہِ منز پرن کیت کہنی، لہذا نیوم یہ افسانہ ٹایپ کٔرتھ۔

story

گابہ گندُر

امین کامل

(دسمبر 1996)

"وچھو گابہ گندرا، یہ بہ ونے تی چھے کرُن، تی چھے ونن تہِ۔ چھُیہ منظور؟” میہ وونس دو ٹوک فیصلہ پاٹھۍ۔

قصہ سپد یہ۔ میہ آو اکھ پلاٹ ذہنس اندر تہ ہیوتم افسانہ لیکھن۔ اکھ کردار ژورُم گابہ گندر تہ ترووم پلاٹ چہ استتھۍ (سچویشنس) اندر، یہ پریتھ افسانہ نگار کران چھہ۔ مگر امس بدبختس آیہ خبر کیا ہۅنگہ تہ کورنم واد۔

استتھۍ ٲس یہ۔ اکھ وٲناکھ صحراو۔ نہ کُنہِ زن نہ زانپٹ۔ اسمانس ووکھہ بتھہِ کٹہ کال اوبر نال ؤلتھ۔ باسان سہ واو پھیریس زِ انسانس نیہِ ژپندر کٔرتھ تُلتھ تہ ٹھاسیس خبر کتھ شایہ تڑاخ کٔرتھ پٔتھرس۔ گابہ گندرس اوس تن تنہا اتھ وٲرانس اندر مویوس نظر تلِتھ اسمانس کن ونن "خدایہ یہ کتھ شنیاہس اندر آس ہینہ۔ یہ کمن پاپن ہند چھم سزا۔ میانہِ خدایہ یمہِ وٲراگہ منزہ نیرنچ کڈتم کانہہ وتھ، نتہ آسیم چھۅچھہ کتُر کرۍ کرۍ زو دین۔” امہِ پتہ اوسس گہے دچھنۍ تہ گہے کھورۍ وٲراگہ مژرس اندر دورُن نیرن وتھ ژھارنہ مۅکھہ۔ ادہ یہ گابہ گندر ووتھم بٔڈتھ تہ بولتھ "بہ پکے نہ اتھ وٲناکھس اندر، نہ دمے خدایس کن بداد۔ ژیہ ہیوتتھس بہ سیاست کارن ہندِ اندرے استعمال کرُن۔ ژیہ چھے ظہرا ہٲل گٲمژ کردار اننۍ تہ وانہِ لاگنۍ۔ مگر بہ چھہ سے نہ تمو سیدہ بوٹو منزہ۔ بالکل نہ۔”

"ہیا ما لاگ یہ بکھ” میہ وونس بُتھ کٔرتھ "سیود کرو کلامہ۔”

"ژہ کیا سیود چھکھ پانہ” امی دتم جواب "ژیہ آیی نا کُنہِ کانہہ آدم بستیاہ اتھہِ۔ کانہہ خۅش یِون اوند پوکھا۔ زنانہ مرد دۅہ دینک ویوہار کران، پھیران تھوران۔ شرۍ یمے لالہ پھلۍ ہوۍ گندان درۅکان۔ خبر ژیہ کیازِ چھے انسانن سیتۍ کھٔر۔ چھرا ویران تہ دٔدون سوچان۔ سیزن ویزن کتھن دم پھٹۍ تہ کھرۍ دار بناوان۔ میہ چھے نہ اتھ سیتۍ بروبدی۔ بہ چھہ سے نہ میژِ لۅپن کینہہ تہِ۔”

"ہیو لۅپنس ہا چھہ ٹھوس آکار پرکار آسان” میہ گوو امۍ سند واد موت "ژیہ نہ پنن بتھ، نہ تھر۔ یہ چھے تہِ چھے میون دیت، کلہ پیٹھہ نلس تام۔”

"ہنہہ۔ بڈہ منت چھیتھم تھٲومژ۔” امی کورم خندہ "ہیو میہ اوس نا پنن وجودے کانہہ، تیا؟ بہ ہا اوسس چانین کاڈین منز مزس اندر تکیس سیتۍ ڈوکھا دتھ بہت۔ ادہ پیی میہ پیٹھ نظر تہ اونتھس کڈتھ۔ میانیو شانو پیٹھۍ پننہ افسانہ نگاری ہند بندوق چلاونہ خاطرہ۔”

"ہیو ژہ چھکھ کسو تیوت” میہ آو جان منس پیٹھ "گژھو مر کنہِ نالہِ منز، یوت گُرِ میہ کرُم۔”

"نالہِ منز؟” امۍ تروو شیطانۍ کھنگالہ "تتہِ ہا کھالہم ژہ پانس مور کٔرتھ واپس۔”

"تلو تلو چھہم نا ژہ توتہِ خبر کیا لاس۔” میہ وونس اتھہ گلوتھ۔

"آسہ ہا نے لاس تہ ژورتھس کیازِ، ہہ ہہ ہہ” امس ویژ نہ میانۍ کتھ۔

"شہمت ہسا پھٔرم، بییہ کیا” میہ اوس شرارتہ سیتۍ پان الان "میہ دوپ سیدِ پدِ چھکھ، ادہ ژیہ ہیو ورہ ہولے چھم نہ وچھمت۔”

"ادہ سا تہ ژھن سارۍ سے بلایہ۔ نیایی کتھ چھہ کرُن۔” امۍ وون اطمینانہ سان ہیو "آیہ نہ پانوانۍ بروبدی، پان ماریی کتھ چھیہ۔ بہ اژے اورۍ کاڈین منز واپس۔”

"ہیو تھوہ تھوہ، تور ہا دمے اژنہ۔ خبر ژیہ کیا بوزتھس بہ۔”

"وچھ کُس دیم نہ اژنہ۔ ہیو تیلہِ لجیا میانہِ اور اژنچ خبر زِ وۅنۍ لگی۔” امۍ وونم تھیکتھ۔

"ہیو دوپمے ہا، بہ چھسے نوکر۔ تل سا تھپھ۔” میہ گنڈس گلۍ "میہ نسا چھہ نہ افسانے لیکھن۔ انس بلایہ۔”

"ژہ کسو گوکھ افسانہ نہ لیکھن وول، ہونہہ” امۍ کورم طنز ہیو "بہ ہا لیکھناوتھ، بییہ تی یہ بہ یژھہ۔ چون مجال چھا نہ ونن۔”

"کورم کُس خطا” میہ دژ ڈیکس ژنڈ "یا ژہ بنوومکھ کردار تہ ییتہِ پیٹھہ ہور تام تھوومے ناو گابہ گندر۔” بہ آس سخ ہینہ "ادہ سا تہ ون کیا چھم لیکھن، ونُو؟”

"گیہ کتھ، وۅنۍ آکھ نا لیہ” امۍ گلنوو باز زینتھ ہیو کلہ۔

"ژہ ہا تراوکھ میہ ذلیل کٔرتھ، افسانہ نگارن اتھہِ ہا اسناوہم۔”

"کینہہ تہِ اسناوے نہ” امۍ وونم اسونہِ نرم دہانہ "ژہ مان صرف میانۍ اکھ کتھ۔”

"ہیم سا مچلکہ لیکھتھ۔ بد بتھس ہے کردار بنوومکھ۔” میہ وونس پھوشتھ۔

"ادہ ژہ چھکھ بڈہ لڑایہ گور۔ یتھہ پاٹھۍ ما اندِ۔ ہنا ہیچھ تاب تحمل” امۍ دژم داے۔

"ہتہ سا ہیوچھم تاب” میہ وونس دزتھ "ون سا کیا چھم کرُن۔”

"آ، بہ ونے۔ ژہ کر میہ سیتۍ رسا مسا۔”

"ہیو، بہ کرا ژیہ سیتۍ رسا مسا؟” میہ گنڈن ریہہ "پننس کردارس سیتۍ؟ یہ ہا گوو تاون۔”

"مسا کر” امۍ وون ژٹتھ ہیو "بہ تہِ چھس نہ سوۍ پونز زِ چانین رزہ درسن پیٹھ تلہ وۅٹہ تہ لتھوہ پان۔”

"ہیو کلہ دود ہا تلتھم۔ یہ کۅسا بلایہ کٔرم پانس اگادِ” میہ تراوۍ ہتھیار "ہتہ سا کورم رسا مسا۔ ون سا کرُن کیا چھم؟”

"کرُن چھے نہ کہنۍ۔ صرف یہ زِ بہ کرے تمہ آیہ رول یُتھ میون ناو ہمیشہ خاطرہ زندہ روزِ۔۔ فلانۍ کہانی ہند کردار گایہ گندر۔”

"گوو میہ چھہ چون نگارہ واین۔ ژہ علمن کھالن” میہ ترکراویس اچھ "ہیو گایہ گندرا، تمہ ہا چھے رایہ، بوزتھا۔ بہ ہا لیکھہ تمہِ آیہ افسانہ یُتھ میون ناو ژۅپارۍ شہرہ لبہِ۔ ژہ کۅسا پھۅپھس مج گوکھ؟”

"ہہ، ہہ،ہہ،ہہ” امۍ تروو ٹھہہ ٹھہہ اسن "میہ دوپ ژیہ چھے گوج۔۔ مگر ژہ چھکھ ژکہِ ژھوژ ڈون۔ کینہہ نبا کہنۍ نہ” یہ ونان ونان لوگ ژلنہِ۔

"ہیو ہیو، ژلان کوتو چھکھ؟ میہ دژس تھانتھرتھ کریکھ "کتھ بوزو، گابہ گندرا، کتھ بوزو” امۍ بوز نہ کہنۍ۔ یہ ہیوتن میانین اچھن دیدمانہ زنتہ ہواہس اندر تحلیل سپدُن۔ بہ اوسس اتھہ موران۔ تھپھ دمہس تہ کتھ تہ کمس۔ اتھۍ منز گیم امۍ سنز پھسرارے کنن۔۔ "میون نگارہ ہے وایہ ہکھ، چونے ناو کھسہِ ہے علمن زِ کیا زبر کردار چھن تخلیق کورمت۔ تتھ چھنے ژھنمت کردار سند نہ بوزُن۔ بیہہ تہ وۅنۍ قلم رٔٹتھ دٕینہِ۔”

ایک خیال “امین کامل سند افسانہ "گابہ گندُر”” پہ

Muneeb کو جواب دیں جواب منسوخ کریں

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

آپ اپنے WordPress.com اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ /  تبدیل کریں )

Google photo

آپ اپنے Google اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ /  تبدیل کریں )

Twitter picture

آپ اپنے Twitter اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ /  تبدیل کریں )

Facebook photo

آپ اپنے Facebook اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ /  تبدیل کریں )

Connecting to %s